اسسیران قفسس Profile picture
‏‏‏متى نصر اللہ ؟ (اللہ کی مدد کب آئے گی) ان الفاظ کے ساتھ اللہ تعالی کی محبت جوش میں آتی ہے اور اللہ تعالی فرماتے ہیں : الا انا نصر اللہ قریب !
24 Mar
#ایک_بیوی_والے

ابن سینا کہتے ہیں کہ جس کی ایک ہی بیوی ہو، وہ جوانی میں بوڑھا ہو جاتا ہے اسے ہڈیوں، کمر، گردن اور جوڑوں کے درد کی شکایت پیدا ہو جاتی ہے۔ اس کی مایوسی بڑھ جاتی ہے، محنت کم ہو جاتی ہے، ہنسی اڑ جاتی ہے اور وہ شکوے اور شکایات کا گڑھ بن جاتا ہے
++
یعنی ہر وقت شکوے شکایات ہی کرتا نظر آئے گا

قاضی ابو مسعود کہتے ہیں کہ جس کی ایک بیوی ہو، اس کے لیے لوگوں کے مابین فیصلے کرنا جائز نہیں یعنی اس کا قاضی بننا درست نہیں کہ ہر وقت غصے کی حالت میں ہو گا اور غصے میں فیصلہ جائز نہیں
++
ابن خلدون کہتے ہیں کہ میں نے پچھلی قوموں کی ہلاکت پر غور وفکر کیا تو میں نے دیکھا کہ وہ ایک ہی بیوی پر قناعت کرنے والے تھے

ابن میسار کہتے ہیں کہ اس شخص کی عبادت اچھی نہیں ہو سکتی کہ جس کی بیوی ایک ہو
++
Read 10 tweets
23 Mar
جنت کی عورتیں اپنے خاوند کا دل مٹھی میں رکھیں گی

جنت کی عورتیں اپنے خاوند کا دل مٹھی میں رکھیں گی ۔جنت کی عورتیں خوش کلام ہیں اپنی باتوں سے اپنے خاوندوں کا دل موہ لیتی ہیں۔جب کچھ بولیں یہ معلوم ہوتا ہے پھول جھڑتے ہیں اور نور برستا ہے ۔(ابن ابی حاتم میں ہے)
++
کہ انہیں عرب اسلیے کہا گیا ہے کہ ان کی بول چال عربی زبان میں ہو گی ۔ہم عمر یعنی تینتیس برس کی ہوں گی اور خاوند کی اور ان کی طبیت ،خلق بالکل یکساں ہے جس سے وہ خوش یہ خوش جو ایسے ناپسند وہ اسے بھی نا پسند ۔آپس میں ان میں بغض حسد اور رشک نہ ہوگا۔یہ آپس میں بھی ہم عمر ہوں گی
++
تاکہ بے تکلفی سے ایک دوسرے سے ملیں جلیں کھلیں کودیں ۔
(ترمذی کی حدیث میں ہے)کہ یہ جنتی حوریں ایک روح افز باغ میں جمع ہو کر نہایت پیارے گلے سے گانا گائیں گی کہ ایسی سریلی اور رسیلی آواز مخلوق نے کبھی نہ سنی ہو گی ۔ان کا گانا ،
++
Read 6 tweets
23 Mar
جی بیشک اعمال بھی ضروری ہیں لیکن میں اللہ کی رحمت سے امید کرتا ہوں اعمال سے ضروری اللہ کی رحمت ہے کیا آپ نے یہ واقع نہیں سنا

           گذشتہ امتوں میں ایک شخص ایسا گزرا ہے جس کی زندگی کا واقعہ اس حقیقت کو اچھی طرح واضح کرتا ہے۔یہ شخص بڑا ہی عابد اور فرمانبردار تھا ،
++
ستر سال تک اس نے کوئی ایسی حرکت نہ کی ،جو نافرمانی اور سرکشی کے زمرے میں آتی ہو۔اس عرصہ میں مسلسل عبادت و ریاضت میں مصروف رہا۔
           قیامت کے دن میزان پر اس کے اعمال تولے جائیں گے،تو بڑھ جائیں گے اور بہت وزنی نکلیں گےجو اسے جنت میں لے جانے کے لئے کافی ہوں گے۔
++
مگر اللہ تعالیٰ فرشتوں سے کہیں گے میرے بندے کو میرے فضل و احسان سے جنت میں داخل کر دو۔ وہ عابد حیران رہ جائے گا اور عرض کرے گا:
           اے پروردگار !ساری زندگی میں نے تیری عبادت میں گزاری ،ایک لحظہ کے لئے بھی نافرمانی نہ کی ،نیک اعمال اور عبادات کے انبار لگا دئیے۔
++
Read 6 tweets
22 Mar
دو انصاری بچوں کا ابوجہل کو قتل کرنا

حضرت عبدالرحمن بن عوف رضی اللہ عنہ مشہور اور بڑے صحابہ میں ہیں ۔فرماتے ہیں کہ میں بدر کی لڑائی میں میدان میں لڑنے والوں کی صف میں کھڑا تھا ۔میں نے دیکھا کہ میرے دائیں اور بائیں جانب انصار کے دو کم عمر لڑکے ہیں ۔
++
مجھے خیال ہوا کہ میں قوی اور مضبوط لوگوں کے درمیان ہوتا تو اچھا تھا کہ ضرورت کہ وقت ایک دوسرے کی مدد کرتے ۔میرے دونوں جانب بچے ہیں یہ کیا مدد کر سکیں گۓ ۔اتنے میں ان دونوں لڑکوں میں سے ایک نے میرا ہاتھ پکڑ کر کہا چچا جان تم ابو جہل کو پہچانتے ہو میں نے کہا ہاں پہچانتا ہوں ۔
++
تمھاری کیا غرض ہے اس نے کہا مجھے یہ معلوم ہوا ہے وہ رسول اللہ ﷺکی شان میں گالیاں بکتا ہے ۔اس پاک ذات کی قسم جس کے قبضے میں میری جان ہے اگر میں اس کو دیکھ لوں تو اس وقت تک اس سے جدا نہ ہوں گا کہ وہ مر جاۓ یامیں مرجاؤں ۔
مجھے اس کے سوال اور جواب پر تعجب ہوا اتنے میں
++
Read 9 tweets
22 Mar
حضرت خالد بن ولید رضی اللہ تعالی عنہ فرماتے ہیں کہ غزوہ موتہ کے دن میرے ہاتھ میں نو تلواریں تھیں اور میرے ہاتھ میں صرف ایک تلوار رہ گئ تھی جو یمن کی بنی ہوئ اور چوڑی تھی،،،
حضرت اوس بن حارثہ بن لام رضی اللہ تعالی عنہ فرماتے ہیں کہ ہرمز سے زیادہ عربوں کا کوئ دشمن نہیں تھا۔
++
جب ہم مسیلمہ اور اس کے ساتھیوں کو ختم کرنے سے فارغ ہوئے تو ہم بصرہ کی طرف روانہ ہوئے ۔ تو مقام کاظمہ پر ہمیں ہرمز ملا جو بہت بڑا لشکر لے کر آیا ھوا تھا،
حضرت خالد بن ولید رضی اللہ تعالی عنہ میدان میں نکلےاور اسےاپنےمقابلہ کی دعوت دی
چنانچہ وہ مقابلہ کیلئےمیدان میں آگیا،
++
حضرت خالد بن ولید رضی اللہ تعالی عنہ نے اسے قتل کر دیا،
یہ خوشخبری حضرت خالد رضی اللہ تعالی عنہ نے ابو بکر رضی اللہ تعالی عنہ کو لکھی،
جواب میں حضرت ابوبکر رضی اللہ تعالی عنہ نے لکھا
ہرمز کا تمام سامان ہتھیار کپڑے گھوڑا وغیرہ حضرت خالد رضی اللہ تعالی عنہ کو دے دیا جائے،
++
Read 6 tweets
3 Mar
حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہ سے نقل کیا گیا کہ حضرت حسن رضی اللہ عنہ حضرت حسین رضی اللہ عنہ ایک مرتبہ بیمار ہوگٸے تو حضرت علی اور حضرت فاطمہ رضی اللہ عنہما نے نزر مانی کہ اگر یہ تندرست ہو جاٸیں تو شکرانہ کے طور پر تین تین روزے دونوں حضرات رکھیں گٸے ۔
++
اللہ تعالی شانہ کے فضل سے صاحبزادوں کو صحت ہوگٸ ۔۔ ان حضرات نےشکرانہ کے روزے رکھنےشروع فرمادیٸے ۔۔۔۔ مگر گھر میں نہ سحر کے لیے کچھ تھا نہ افطار کے لیے فاقہ پر روزہ شروع کر دیا ۔۔۔صبح کو حضرت علی کرم اللہ وجہہ ایک یہودی کے پاس تشریف لے گٸے 
++
جس کا نام شمعون تھا کہ اگر تو کچھ اون دھاگہ بنانے کے لیے اجرت پر دیدےتو محمد ﷺ کی بیٹی اس کا کام کر دے گی ۔۔۔۔۔ اس نے اون کا ایک گٹھرا تین صاع جو کی اجرت طےکرکے دےدیا۔۔۔۔ حضرت فاطمہ رضی اللہ عنہا نے اس میں سے ایک تہاٸی کاتا اور
++
Read 13 tweets
3 Mar
بزرگوں کا اخبار

آخر ہم کب تک اپنی قوم کے بزرگوں اور بوڑھوں کو نظر انداز کرتے رہیں گئے آج جس اخبار کو اٹھا کر دیکھیں اس میں آپ کو بچوں ،عورتوں اور نوجوانوں اور طالب علموں کے خصوصی صفحات نظر آئیں مگر بوڑھوں کا صفحہ دھونڈنے سے بھی نہیں ملے گا ۔
++
یہی حال کتابوں اور تصنیفوں کا ہے ہر مصنف اس کا انتساب قوم کے مست جوانوں کے نام تو کر دیتا ہے مگر سنجیدہ ،باوقار اور تجربہ کار بزرگ اسے اس اعزاز کے قابل نظر نہیں آتے .شیخ مصلح الدین شیرازی ایک ایسے مصنف گزرے ہیں
++
جہنوں نے اپنی شہر آفاق کتاب"گلستان"کا چھٹا باب بوڑھوں کے نام وقف کیا چونکہ وہ خود بوڑھے ہو چکے تھے
اسلیے چٹکیاں لینے سے باز نہ آۓ اور بزرگوں کے قصے چھیڑ بیٹھے جنہیں بڑھاپے میں نئ شادی کی سوچتی ہے ۔وہ اپنی جوان بیگم کو اپنی زبان تجربہ کاری اور مال سےلبھانےکی ازحد کوشش کرتے ہیں
+
Read 10 tweets
2 Mar
سنت پر استقامت کرامت سے بڑھ کر ہے

ارشاد فرمایا کہ آجکل لوگ بزرگ ان ہی کو سمجھتے ہیں جن سےکرامتوں کا ظہور ہو اور چونکا دینے والی بات ہو بزرگی کا معیار سنت نبویﷺ کی پیروی ہےجوسنت نبویﷺ پر عمل پیرا ہےوہی بزرگ ہےاگر کوئی سنت کوچھوڑ کرعجیب و غریب چیزیں کیوں نہ دیکھاۓ
++
وہ بزرگ نہیں ہوسکتا ؎

گر ہوا پر اڑتا ہو وہ رات دن
ترک سنت جو کرے وہ شیطان گن

حضرت جنید بغدادیؒ کےپاس ایک مرید دور سےآۓمرید بغور جائزہ لیتا رہا اور توقع قائم کئے ہوۓ تھا کہ کوئی کرامت ظاہر ہوگی مگر کئ دنوں تک رہنے کےبعد بھی کرامت کا ظہور نہیں ہوا تو مایوس ہو کر واپس جانےلگا
++
حضرت جنید بغدادیؒ نے اس سے جانے کی وجہ پوچھی تو بتایا کہ میں کسی کرامت کی امید پر آیا تھا مگر یہاں تو کچھ بھی نظر نہیں آیا حضرت بغدادیؒ نے ان سے فرمایا اچھا بتاؤ اتنے عرصے میں کوئی خلاف سنت یا خلاف شریعت کام بھی کرتے ہوۓدیکھا ہے؟اس نے جواب دیا نہیں آپ کا ہر عمل سنت کے مطابق ہے
++
Read 4 tweets
22 Feb
جنگ یمامہ

مسیلمہ کذاب کے دعویٰ نبوت کے نتیجے میں لڑی گئی  جہاں 1200 صحابہ کرامؓ کی شہادت ہوئی
  اور اس فتنے کو مکمل مٹا ڈالا۔
خلیفہ اول سیدنا ابوبکر صدیقؓ خطبہ دے رہے تھے: لوگو! مدینہ میں کوئی مرد نہ رہے،اہل بدر ہوں
  یا اہل احد سب یمامہ کا رخ کرو"
++
بھیگتی آنکھوں سے وہ دوبارہ بولے:
مدینہ میں کوئی نہ رہے حتٰی کہ جنگل کے
  درندے آئیں اور ابوبکرؓ کو گھسیٹ کر لے جائیں"

صحابہ کرامؓ کہتے ہیں کہ اگر علی المرتضیؓ
  سیدنا صدیق اکبرؓ کو نہ روکتے تو وہ
  خود تلوار اٹھا کر یمامہ کا رخ کرتے۔
++
13 ہزار کے مقابل بنوحنفیہ کے 70000 جنگجو
  اسلحہ سے لیس کھڑے تھے۔
یہ وہی جنگ تھی جس کے متعلق اہل مدینہ کہتے تھے: "بخدا ہم نے ایسی جنگ نہ کبھی پہلے لڑی
  نہ کبھی بعد میں لڑی"
اس سے پہلے جتنی جنگیں ہوئیں بدر احد
  خندق خیبر موتہ وغیرہ صرف 259
صحابہ کرام شہید ھویے تھے۔
++
Read 4 tweets
21 Feb
عیسائیوں کا وفد جب غرناطہ پہنچا تو کیا دیکھتا ہے ،
ایک بچہ ہاتھ میں تیر کمان لیکر کھڑا ہے اور اداس ہے،
پوچھنے پر پتہ چلا کہ اب میں تیر کے ساتھ اڑتے ہوۓ پرندوں کو شکار کرتے کرتے بور ہوگیا ہوں
اب میرا مشغلہ تیر کے ساتھ دریا میں موجود مچھلی کا شکار کرنا ہے ۔
++ Image
عیسائی وفد سن کر دنگ رہ گیا
کہ جس قوم کا بچہ اتنا اچھا تیر انداز ہے ،،
وہ قوم میدان جنگ میں شکست نہیں کھا سکتی ۔

وہ وفد واپس گیا اور بڑی سوچ وچار کے بعد نوجوان لڑکیوں کے وفود دوستی ثقافت کے نام پر مسلمان ملک میں بھیجنے شروع کردئیے۔
++
کچھ عرصہ گزرا اس بےحیائی نے کام دکھایا اور مسلمانوں کی غیرت کو دیمک کی طرح چاٹ لیا ۔

اب وہی عیسائی وفد دوبارہ آیا ۔ ۔ ساحل سمندر پر اترا ۔ ۔ تو کیا دیکھتا ہے ۔ ۔ ایک نوجوان اداس ہو کر سر جھکاۓ بیٹھا ہوا تھا ۔
پوچھنے پر پتہ چلا کہ اس کی محبوبہ نے ملنے کا عہد کیا تھا
++
Read 5 tweets
21 Feb
😁😉😂
ٰعلما کے لئے بطور خاص
ﺍﯾﮏ ﻧﺤﻮﯼ ﻋﻮﺭﺕ ﺍﭘﻨﮯ ﺷﻮﮨﺮ ﮐﻮ ﺩﻭﺳﺮﯼ ﺷﺎﺩﯼ ﮐﮯ ﻭﻗﺖ ﮐﯿﺎﺑﺪﺩﻋﺎ ﺩﯾﺘﯽ ﮨﮯ، ﭘﮍهیں اور ﻧﺤﻮ ﺗﺎﺯﮦ ﮐﺮﯾﮟ.
++
ﺍﮮ ﺍﻟﻠﮧ ﺍﮔﺮ ﺗﻮ ﺍﺳﮯ ﺩﻭﺳﺮﯼ ﺑﯿﻮﯼ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺟﻤﻊ ﮐﺮے ﺗﻮ " ﺟﻤﻊ ﺗﮑﺴﯿﺮ " کرنا
ﺍﻭﺭﺗﻮ ﺍﺳﮯ ﻣﯿﺮﮮ ﺳﺎﺗﮫ ﺟﻤﻊ ﮐﺮے ﺗﻮ " ﺟﻤﻊ ﺳﺎﻟﻢ " ﮐﺮنا
++
ﺍﮮ ﺍﻟﻠﮧ ﻣﯿﺮﯼ ﺳﻮﮐﻦ ﮐﻮ " ﮐﺎﻥ " ﮐﮯ ﺍﺧﻮﺍﺕ ﻣﯿﮟ ﮐﺮﺩﮮ ( ﯾﻌﻨﯽ ﻭﮦ ﭘﮩﻠﮯ ﺑﯿﻮﯼ ﺗﮭﯽ ) ﺍﻭﺭ ﻣﺠﮭﮯ " ﺻﺎﺭ " ﮐﮯ ﺍﺧﻮﺍﺕ ﻣﯿﮟ ﮐﺮﺩے ( ﯾﻌﻨﯽ ﻓﯽ ﺍﻟﺤﺎﻝ ﻣﯿﮟ ﺑﯿﻮﯼ ﮨﻮﮞ )
++
Read 10 tweets
11 Feb
دو عورتیں قاضی ابن ابی لیلی کی عدالت میں پہنچ گئیں،یہ اپنے زمانے کے مشہور و معروف قاضی تھے.

قاضی نے پوچھا
تم دونوں میں سے کس نے بات پہلے کرنی ہے؟

ان میں سے بڑھی عمر والی خاتون نے دوسری سے کہا تم اپنی بات قاضی صاحب کے آگے رکھو.
++
وہ کہنے لگی قاضی صاحب یہ میری پھوپھی ہے میں اسے امی کہتی ہوں چونکہ میرے والد کے انتقال کے بعد اسی نے میری پرورش کی ہے یہاں تک کہ میں جوان ہوگئی.

قاضی نے پوچھا اس کے بعد ؟

وہ کہنے لگی پھر میرے چچا کے بیٹے نے منگنی کا پیغام بھیجا انہوں نے ان سے میری شادی کر دی،
++
میری شادی کو کئی سال گزر گئے ازدواجی زندگی خوب گزر رہی تھی ایک دن میری یہ پھوپھی میرے گھر آئی اور میرے شوہر کو اپنی بیٹی سے دوسری شادی کی آفر کرلی ساتھ یہ شرط رکھ لی کہ پہلی بیوی(یعنی میں) کا معاملہ پھوپھی کے ہاتھ میں سونپ دے،
++
Read 13 tweets