#نماز_راہ_نجات_ہے
دو عبرت انگیز واقعات:
مولانا ابوالکلام آزاد نے اپنی مشہور کتاب تذکرہ میں قوموں کے عروج و زوال میں کے رویوں پر مبنی کچھ نہایت عبرت انگیز واقعات پیش کئے ہیں۔
*پہلا واقعہ دیکھئے۔*
یوروپ کے اُجڈ وحشی پوپ کی مسلط کردہ صلیبی جنگ کا ایندھن بن رہے تھے۔ عین اُن دنوں
کا واقعہ ہے جب مسلمان اور صلیبی لشکر مصر کی سر زمین پر آمنے سامنے تھے۔ اُس وقت صلبیوں کی حالت ایک صلیبی نائٹ نے ان الفاظ میں بیان کی ہے۔ ایک رات ہم دریا کے راستے کی حفاظت کے لیے بنائی گئی برجیوں پر پہرہ دے رہے تھے، تو اچانک دیکھا کہ مسلمانوں نے ایک انجن جسے پٹریری (یعنی منجنیق)
کہتے ہیں، لا کر نصب کر دیا اور اس سے ہم پر آگ پھینکنے لگے۔ جیسے ہی مسلمانوں کا پہلا بان چلا۔ ہم گھٹنوں کے بل جھک گئے اور دعا میں مشغول ہو گئے۔ ہر مرتبہ جب بان چھوٹنے کی آواز ہمارا ولی صفت پادشاہ سنتا تھا، تو بستر سے اٹھ کھڑا ہوتا تھا اور روتے ہوئے ہاتھ اٹھا اٹھا کر نجات دہندہ سے
التجائیں کرتا۔ مہربان مولیٰ! میرے آدمیوں کی حفاظت کر! لیکن بالآخر کوئی دُعا بھی سُودمند نہ ہوئی اور آگ کے بانوں نے تمام برجیوں کو جلا کر خاکستر کر دیا۔ صلبیوں نے تاریخی شکست کھائی اور لاکھوں لاشیں چھوڑ کر فرار کی راہ اختیار کرنا پڑی۔
*اب دوسری جانب کی حالت دیکھئے*
اٹھارویں صدی کے اواخر میں جب نپولین نے مصر پر حملہ کیا تو مراد بک نے جامع ازہر کے علماء کو جمع کر کے ان سے مشورہ کیا تھا کہ اب کیا کرنا چاہئے۔ علماء ازہر نے بالاتفاق یہ رائے دی تھی کہ جامع ازہر میں صحیح بخاری کا ختم شروع کر دینا چاہئے کہ انجاحِ مقاصد کے لیے تیر بہدف ہے۔ چنانچہ
ایسا ہی کیا گیا لیکن ابھی صحیح بخاری کا ختم، ختم نہیں ہوا تھا کہ اہرام کی لڑائی نے مصری حکومت کا خاتمہ کر دیا۔ اور عرب پر غلامی کے دور کا آغاز ہو گیا۔
انیسویں صدی کے اوائل میں جب روسیوں نے بخارا کا محاصرہ کیا تھا تو امیرِ بخارا نے حکم دیا کہ تمام مدرسوں اور مسجدوں میں
ختم خواجگان پڑھا جائے۔ اُدھر روسیوں کی قلعہ شکن توپیں شہر کا حصار منہدم کر رہی تھیں۔ اِدھر لوگ ختمِ خواجگان کے حلقوں میں بیٹھے، "یا مقلب القلوب یا محوّل الاحوال" کے نعرے بلند کر رہے تھے۔ بالآخر وہی نتیجہ نکلا جو ایک ایسے مقابلہ کا نکلنا تھا۔ جس میں ایک طرف گولہ بارود ہو، دوسری
طرف ختم خواجگان!
دعائیں ضرور فائدہ پہنچاتی ہیں مگر انہی کو جو عزم و ہمت رکھتے ہیں۔ وسائل بہم پنچاتے اور اُن کا بہترین استعمال کرتے ہیں، بے ہمتوں کے لیے دعا ترکِ عمل اور تعطلِ قویٰ کا حیلہ ہوتی ہے۔
(اقتباس: تذکرہ )

• • •

Missing some Tweet in this thread? You can try to force a refresh
 

Keep Current with ڈوگرصاحب

ڈوگرصاحب Profile picture

Stay in touch and get notified when new unrolls are available from this author!

Read all threads

This Thread may be Removed Anytime!

PDF

Twitter may remove this content at anytime! Save it as PDF for later use!

Try unrolling a thread yourself!

how to unroll video
  1. Follow @ThreadReaderApp to mention us!

  2. From a Twitter thread mention us with a keyword "unroll"
@threadreaderapp unroll

Practice here first or read more on our help page!

More from @78ds2

17 Sep
ایک اندھا آدمی ایک فائیو سٹار ھوٹل میں گیا۔
ھوٹل منیجر نےاس سے پوچھا:
"یہ ھمارا مینو ھے،
آپ کیا لیں گے سر؟"
اندھا آدمی:
"میں اندھا ھوں،
آپ مجھے اپنے کچن سے چمچہ کو کھانے کےاشیاء میں ڈبو كر لا دیں، میں اسےسُونگھ کر آرڈر کر دوں گا۔"
منیجر کو یہ سن کر بڑی حیرانی ھوئی۔
اُس نے دل ھی
دل میں سوچا کہ کوئی آدمی سُونگھ كر کیسے بتا سکتا ھے کہ ھم نےآج کیا بنایا ھے، کیا پکایا ھے۔
منیجر نے جتنی بار بھی اپنے الگ الگ کھانے کی اشیاء میں چمچہ ڈبو كر، اندھےآدمی کو سُنگھایا، اندھے نے صحیح بتایا کہ وہ کیا ھے اور اندھے نے سُونگھ کر ھی کھانے کا آرڈرکیا !!
ھفتہ بھر یہی چلتا رھا۔
اندھا سُونگھ كر آرڈر دیتا اورکھانا کھا کرچلا جاتا..!
ایک دن منیجر نے اندھے آدمی کا امتحان لینےکا سوچا کہ ایک اندھا آدمی سُونگھ كر کس طرح بتا سکتا ھے؟
منیجر کچن میں گیا اور اپنی بیوی شگفتہ سے بولا کہ تُم چمچے کواپنے هونٹوں سے گیلا کر دو۔
Read 4 tweets
17 Sep
#نماز_راہ_نجات_ہے
ایک مشہور واقعہ ہے کہ کسی بادشاہ کے دربار میں ایک بھنگی کو پیش ہونے کا موقعہ ملا تو عجیب بات رونما ہوئی..
دربار میں داخل ہوتے ہی وہ دھڑام سے فرش پر گرا اور بےہوش ہوگیا..
اسے ہوش میں لانے کی سر توڑ کوشش کی گئ مگر بے سود.. آخر ایک دانا درباری نے ایک گندگی سے
آلودہ جوتا لانے کا مشورہ دیا.. جوتا لایا گیا تو دانا نے کہا کہ اس بھنگی کو یہ جوتا سونگھایا جائے
بظاہر اس بے سر و پا دکھائی دینے والےحکم پر بادل نخواستہ عمل درآمد کیا گیا تو یہ دیکھ کر درباریوں کی حیرت کی انتہاء نہ رہی کہ بھنگی عالم بے ہوشی کو خیر باد کہہ کر عالم ہوش میں آگیا
یعنی جو کام شاہی حکیم کی اعلی جڑی بوٹیوں سے تیار کردہ قیمتی دوائیں نہ کر سکیں غلاظت سے بھرا جوتا وہ کمال دکھا گیا !
سب لوگ دانا درباری سے ہوچھنے لگے کہ یہ کیا ماجرا ہے..؟ تب اس نے جو حکمت بتائی وہ تاریخ میں سنہرے حروف سے لکھ دی گئی..
اس نے کہا کہ اس بھنگی کی عمر گندگی اور غلاظت
Read 7 tweets
17 Sep
#نماز_راہ_نجات_ہے
ایک ہفتے قبل ایک عزیز اپنی بیٹی کی شادی کا بلاوا دینے گھر آئے، چائے بسکٹ کھانے کے بعد بیگ سے خوبصورت اور مہنگا شادی کارڈ نکال کر مجھے تھمادیا،،
آپ نے شادی میں ضرور آنا ہے ورنہ یہ تین سو روپے کا کارڈ ضائع ہوجائے گا؛؛ انہوں نے 300 روپے پر زور دیتے ہوئے کہا،
پھر جاتے ہوئے کہنے لگے،،
جناب لفافہ بھی اسی حساب سے لائیے گا،، میں بولا، شکیل بھائی بےفکر رہیں ان شاءاللہ لفافہ اس کارڈ سے بھاری ہی ہوگا؛؛ شکیل بھائی تصور میں 5000 روپے
کا بھاری لفافہ دیکھتے ہوئے خوشی خوشی رخصت ہوگئے؛؛
کل رات مقررہ وقت پر میں اہلیہ کے ہمراہ تقریب میں پہنچ گیا،
شکیل بھائی مجھے دیکھتے ہی آگے بڑھے
اور خوشی سے گلے لگالیا، کان میں کہنے لگے، لفافہ بھاری ہی ہے نا؟،، جی جی بالکل آپ کی توقع سے بھی زیادہ بھاری ہے بس کھانا کھاتے ہی میں دیتا ہوں؛؛
شکیل صاحب نے ہم دونوں کو صوفے پر بٹھایا اور اپنے بیٹے سے کہنے لگے،، جمیل چاچو کا کھانے میں خصوصی
Read 10 tweets
17 Sep
#نماز_راہ_نجات_ہے
کلمہ پڑھی ہوئی ''اسلامی جمہوریت''
ﺩﻭﻟﮩﺎ ﮐﯽ ﺑﮩﻨﯿﮟ ﻓﺨﺮﯾﮧ ﻟﮩﺠﮯ ﻣﯿﮟ ﺳﮩﻠﯿﻮﮞ ﮐﻮ ﺑﺘﺎﺗﯽ ﭘﮭﺮﺗﯿﮟ ﮐﮧ ﺑﮭﯿﺎ ﺍﻧﮕﻠﯿﻨﮉ ﺳﮯ ﻣﯿﻢ ﻻﺋﮯ ﮨﯿﮟ، ﺑﭽﮯ ﺗﻮ ﺍﺱ ﮐﻤﺮﮮ ﺳﮯ ﻧﮑﻠﺘﮯ ﮨﯽ ﻧﮧ ﺗﮭﮯ ﺟﮩﺎﮞ ﭘﺮ
ﻣﯿﻢ ﺗﮭﯽ ﺍﻣﺎﮞ ﮐﻮ ﺍﻧﮕﻠﺶ ﻭﻏﯿﺮﮦ ﺗﻮ ﻧﮧ ﺁﺗﯽ ﺗﮭﯽ ﻟﯿﮑﻦ ﭘﮭﺮ ﺑﮭﯽ ﺭﻭﺍﯾﺘﺎً ﭼﺎﺩﺭ ﺍﻭﺭ ﺳﻮﭦ ﮔﻮﺭﯼ ﮐﻮ ﺩﯾﺎ، ﺑﻼﺋﯿﮟ ﻟﯿﺘﯽ ﻟﯿﺘﯽ ﺭﮦ ﮔﺌﯿﮟ ﮐﮧ ﭘﺘﮧ ﻧﮩﯿﮟ ﻣﯿﻢ ﮐﻮ ﮐﯿﺴﺎ ﻟﮕﮯ. ﮨﺎﮞ ﺑﯿﭩﮯ ﮐﻮ ﺟﯽ
ﺑﮭﺮ ﮐﺮ ﺩﻋﺎﺋﯿﮟ ﺩﯾﺘﯽ ﺭﮨﯿﮟ.
ﺻﺮﻑ ﺍﺑﺎﺟﯽ ﺗﮭﮯ ﺟﻨﮩﻮﮞ ﻧﮯ ﺑﯿﭩﺎ ﺟﯽ ﺳﮯ ﺩﺭﯾﺎﻓﺖ ﮐﯿﺎ، ﻣﺴﻠﻤﺎﻥ ﮐِﯿﺎ ﮨﮯ؟
ﺑﯿﭩﺎ ﺟﯽ ﻧﮯ ﺟﻮﺍﺏ ﺩﯾﺎ ﺟﯽ ﺍﺱ ﻧﮯ ﮐﻠﻤﮧ ﭘﮍﮬﺎ ﮨﻮﺍ ﮨﮯ،
ﺍﺱ ﭘﺮ ﺍﺑﺎﺟﯽ ﻣﻄﻤﺌﻦ ﮨﻮﮔﺌﮯ!
Read 22 tweets
16 Sep
#نماز_راہ_نجات_ہے
سبق آموز واقعہ –
آگ نے ایک دکان کے علاوہ پوری مارکیٹ جلا دی
“ٹرن ، ٹرن ،ٹرن” رات کے ساڑھے تین بجے فون کی گھنٹی کی آواز سن کر نعیم جاگ گیا اور “یا اللہ خیر” کہتے ہوۓ فون اٹھا لیا۔ “نعیم صاحب مارکیٹ میں بجلی کے شارٹ سرکٹ کی وجہ سے آگ لگ گئ ہے اور بہت سے لوگوں یی
دوکانیں جل کر خاکستر ہو چکی ہیں ، آپ جتنی جلدی ہوسکے یہاں تشریف لائیں اور آکر اپنی دوکان سنبھالیں” دوسری طرف سے اس کا ایک جاننے والا یہ خبر سنا رہا تھا۔ “اوہ ، اللہ مہربانی فرماۓ ، اب نماز کا وقت ہونے والا ہے میں نماز کے بعد آجاؤں گا” نعیم نے جواب دیا۔ “حد ہوگئ یار ، ابھی تک اگر
کچھ بچ بھی گیا ہوا تو آپ کے نماز پڑھنے تک بھسم ہو جاۓ گا” جواب ملا۔ “کوئ بات نہیں اللہ مالک ہے” یہ کہ کر اس نے فون رکھ دیا۔ اطمینان سے نماز ادا کی ، اپنے رب سے دعا مانگی اور گاڑی نکال کر مارکیٹ کی طرف چل پڑا۔ مارکیٹ کے اردگرد کی فضا آگ اور دھویں کے بادلوں سے گھری ہوئی تھی اور
Read 8 tweets
15 Sep
#نماز_راہ_نجات_ہے
"بات تربیت کی ہوتی ہے"
دو ماہ قبل مجھے والد کی بیماری کی وجہ سے رات گئے ہسپتال جانا پڑا۔ راستے میں ایک ویران جگہ پر پٹرول ختم ہونے کی وجہ سے میری گاڑی رک گئی۔ میں نے بھائی کو فون کیا، اسے آنے میں کم از کم گھنٹہ لگنا تھا۔ میں انتظار کرنے لگی۔
کچھ دیر بعد وہاں سے
سترہ اٹھارہ سال کا ایک لڑکا بائیک پر تیزی سے گزرا۔ مگر گاڑی سے کچھ آگے جانے کے بعد وہ رکا اور واپس آنے لگا۔ مجھے خطرے کی گھنٹی بجتی محسوس ہوئی، میں نے گاڑی لاک کی اور آیۃ الکرسی پڑھنی شروع کر دی۔ وہ کچھ فاصلے پر رکا اور ہاتھ کے اشارے سے کہا : ”کیا ہوا؟“ میں نے کہا پٹرول ختم ہو
گیا ہے۔ اس نے پوچھا:”بوتل ہے آپ کے پاس؟“ اتفاق سے گاڑی میں ڈیڑھ لٹر والی خالی بوتل موجود تھی جو میں نے اسے دے دی۔ وہ بائیک ٹینک سے اس میں پٹرول بھرنے لگا۔ دو تین منٹ بعد اس نے مجھے بوتل تھمائی اور بولا : ”احتیاط کیا کریں، تھوڑا سا آگے پٹرول پمپ ہے، وہاں تک چلی جائیں۔“ اور چلا گیا
Read 5 tweets

Did Thread Reader help you today?

Support us! We are indie developers!


This site is made by just two indie developers on a laptop doing marketing, support and development! Read more about the story.

Become a Premium Member ($3/month or $30/year) and get exclusive features!

Become Premium

Too expensive? Make a small donation by buying us coffee ($5) or help with server cost ($10)

Donate via Paypal Become our Patreon

Thank you for your support!

Follow Us on Twitter!