نواز شریف اور پیپلزپارٹی کی سیاست کے دو ادوار ہیں۔
مشرف سے پہلے اور مشرف کے بعد۔
مشرف سے پہلے کے دور میں دونوں جماعتوں نے بہت سی غلطیاں کیں۔
جن لوگوں کو علم نہیں کہ کیا غلطیاں تھیں تووہ تحریک انصاف کی حکومت کو دیکھ لیں، یہ ان غلطیوں کا معراج ہے۔
1/5
بحرحال محترمہ بینظیر اور نوازشریف نے آخرکار ان غلطیوں سے سبق سیکھا، ان کے ازالہ جس حد تک ممکن تھا وہ کرنے اور آئندہ ان سے بچنے کا اعادہ کیا۔
پاداش میں بی بی کو شہید کر دیا گیااورمیاں صاحب کو اقتدار سے دور رکھنے کی کوشش کی گئی۔
لیکن نواز شریف نے بینظیر کے ساتھ کئے گئے
2/5
اپنے عہد کو حتی الوسع نبھانے کی کوشش کی۔گو تقاضہ بشریت کے تحت کچھ بھول چوک ہوئی لیکن بحیثیت مجموعی نوے کی دہائی کی سیاست کو کسی حد تک ختم کر دیا۔
اسکے بعد جب تحریک انصاف بنائی گئ تو اسکو پروموٹ کرنے والوں نے نوے کی دہائی کی ہی سیاست کو اپنا وطیرہ بنایا۔
وہ نوجوان جنہیں
3/5
اس پرانی سیاست اوراسکے مضمرات کا پتہ نہیں تھا وہ عمران کے دام میں آ گئے۔
آج بھی انصافی ورکر آپکو کہتاملے گا کہ نوازشریف بھی تو فوج کی مدد سے آیا۔اس نے بھی تو بی بی کو سیکیورٹی رسک کا الزام دیا وغیرہ۔
لیکن ان لا علم لوگوں کو2006اور اسکے بعد کی سیاست نجانے کیوں نظر نہیں آتی۔
4/5
قصہ مختصر نواز شریف نےماضی کی غلطیوں کا احساس کیا، انکی سزا بھی بھگتی اور اب ملک کو اس غلط روش سے ہٹانے کا عہد کیا۔
مگر افسوس آج عمران خان اسی آزمائے ہوئے غلط اور نقصان دہ راستے پر سرپٹ دوڑ رہاہے۔ مگر وہ نہیں جانتا کہ اسکی سزا ملک کے ساتھ ساتھ اسکو خود بھی بھگتنا پڑے گی۔
5/5

• • •

Missing some Tweet in this thread? You can try to force a refresh
 

Keep Current with Kashif Awan

Kashif Awan Profile picture

Stay in touch and get notified when new unrolls are available from this author!

Read all threads

This Thread may be Removed Anytime!

PDF

Twitter may remove this content at anytime! Save it as PDF for later use!

Try unrolling a thread yourself!

how to unroll video
  1. Follow @ThreadReaderApp to mention us!

  2. From a Twitter thread mention us with a keyword "unroll"
@threadreaderapp unroll

Practice here first or read more on our help page!

More from @lostguy79

23 Nov 20
اسرائیل اور پاکستان
حسب معمول کوشش کرونگا تفصیل کے بجائے مختصر بات کروں۔
پاکستان نے اسرائیل کے ناجائز وجود کو کبھی تسلیم نہیں کیا تھا۔اور ہمارا موقف رہا کہ فلسطینیوں کو جبراً بےگھر کر کے بنائی گئی ریاست کسی صورت قابل قبول نہیں۔اور بیت المقدس فلسطینی ریاست کے دارالحکومت
کا حصہ ہے۔
اس کے بعد تیسری عرب اسرائیل جنگ1967میں پاک فضائیہ کے شاہینوں نے باقاعدہ حصہ لیا اور دس اسرائیلی جہاز گرا کر سب سے ذیادہ اسرائیلی جہازگرانے والا ملک بننے کااعزاز حاصل کیا۔
اسکے بعد عرصے تک اسرائیل کےخلاف پاکستان میں جذبات ہمیشہ منفی اور جارحانہ ہی ہے حتیٰ کہ
پرویز مشرف نے اقتدار سنبھال لیا، جوکہ پہلے دن سے مغربی طاقتوں کی آنکھ کا تاراتھا۔
اسی دور میں سب سےپہلے اسرائیل کے بارے پاکستان کا سرکاری سطح پر باقاعدہ نرم رویہ سامنےآیا۔
یہاں تک کہ تاریخ میں پہلی مرتبہ پاکستان اور اسرائیل کے وزرائے خارجہ نے مشترکہ پریس کانفرنس بھی
Read 11 tweets

Did Thread Reader help you today?

Support us! We are indie developers!


This site is made by just two indie developers on a laptop doing marketing, support and development! Read more about the story.

Become a Premium Member ($3/month or $30/year) and get exclusive features!

Become Premium

Too expensive? Make a small donation by buying us coffee ($5) or help with server cost ($10)

Donate via Paypal Become our Patreon

Thank you for your support!

Follow Us on Twitter!