جون ايلیا خانیوال میں۔
ڈاکٹر محمد یوسف سمرا نے ایک آرٹیکل لکھا تھا
"جون ايلیا خانیوال میں" اس آرٹیکل چند اقتباسات ملاحظہ فرمائیں۔
سٹیزنز فورم، خانیوال کی ایک ادبی،سماجی تنظیم ہے جس نے جون ایلیا کے ساتھ ایک شام کا اہتمام کیا جو بعد ازاں تاریخی حیثیت اختیار کر گئی کہ جون کا
1/15
جنوبی پنجاب کا یہ پہلا اور آخری مشاعرہ قرار پایا۔

جون صاحب کے حوالے سے ہمارے اندر ایک سنسناہٹ تھی، ایک بڑا شاعر اور بہت بڑا انسان، ہمارے گھر آ رہا تھا۔ جون بھائی نے آنے کا اقرار بھی کر لیا تھا، دو شرائط کے ساتھ، انیق احمد مضمون پڑھے گا اور میرے علاوہ کوئی نہیں پڑھے گا۔
2/15
ہم نے پہلی شرط مان لی دوسری شرط کی نرمی پر جون بھائی خود آمادہ ہو گئے۔
ہم نے فیصلہ کیا کہ پہلی نشست میں ملتان کے مشہور شاعر اور ادیب جناب اسلم انصاری صاحب پڑھیں گے اور خانیوال سے قمر رضا شہزاد کے ساتھ دو اور شعرا جو مجھے اب یاد نہیں کیونکہ یہ دو دہائیاں پہلے کی بات ہے۔
3/15
خانیوال میں لوگ جون سے زیادہ واقف نہیں تھے۔ انہی دنوں خانیوال میں تازہ تازہ عیسائی مسلم فسادات ہوئے تھے۔ شانتی نگر کا پورا گاؤں آگ کی نظر کر دیا گیا تھا۔ عیسائیوں کے گھروں پر لوٹ مار کی گئی تھی۔ یہ واقعہ ایک عیسائی کے توہین قرآن کرنے کی خبرسے ہوا تھاجو بعد میں غلط ثابت ہوئی۔
4/15
جون کی انگریزی نامی مشابہت کی بنا پرکچھ لوگ یہ سمجھےکہ امریکی سفیر آ رہا ہےکیونکہ گزشتہ واقعہ کی وجہ سے یورپی سفرا عیسائی برادری سےاظہار یکجہتی کے لئے آ جا رہے تھے۔
جون کی حد تک ایک بات تو درست تھی جون سفیر تو تھامگر کسی ملک کانہیں بلکہ ادب کا سفیر تھا اور عالمگیر سفیر تھا۔
5/15
وہ اردو کا بے تاج بادشاہ تھا۔ اردو اس کے گھر کی باندی، اس کے سامنے ہاتھ باندھے کھڑی ”حکم میرے آقا“ کی منتظر رہتی تھی۔ اردو جون کے سامنے موم تھی جس کے وہ پتلے بنایا کرتا تھا۔
کچھ لوگ جون کو جانتے تھے بلکہ کچھ زیادہ ہی جانتے تھے۔ شعیب الرحمان اور کچھ اور دانشوروں کی رائے تھی
6/15
”یہ بابا ناچتا بہت ہے“ ۔ یوں شعر پڑھتے، ناچتے، جھومتے ایک بار سٹیج سے کود گیا تھا اور اپنا بازو تڑوا بیٹھا تھا۔ ہم نے چونکہ فرشی نشست کا اہتمام کیا تھا اس لیے ہمیں کوئی خوف نہیں تھا.

جون کو کراچی سے ملتان بائی ایر اور ملتان سے خانیوال بذریعہ سڑک آنا تھا۔ ائرپورٹ پر
7/15
طاہر حیدر واسطی نے انہیں خوش آمدید کہا ۔ طاہر واسطی ہمارے دوست، فورم کے سرگرم رکن، اور ہمارے بہت ہی ملنسار دوست ہیں، آج کل لندن میں قانون کی پریکٹس کرتے ہیں۔ گاڑی خانیوال کی طرف رواں دواں تھی۔ باہر شدید گرمی تھی اور ملتان کی مشہور لو چل رہی تھی۔
8/15
جون بھائی نے گاڑی کا شیشہ کھول لیا تھا۔ہم نے اپنی دانست میں جون بھائی کو بتایا باہر لو چل رہی ہے، شیشہ بند کر لیں۔ جون سفید کرتے میں ملبوس تھا، بڑے سرد لہجے میں خاموشی توڑتے ہوئے کہا ”اسی لو کے لئے تو ملتان آیا ہوں۔ میرا دل چاہ رہا ہے یہ لو میرا سینہ چیرتی ہوئی پار ہو جائے“.
9/15
پہلی گفتگو سے ہی اندازہ ہو گیا کہ جون کی شاعری لوگوں کی سمجھ سے بالاتر کیوں ہے؟راستے میں پوچھا، شاہ شمس کا مزار کدھر ہے؟ میں نے شاہ شمس سے ملنا ہے۔
گاڑی واپس ملتان کی طرف موڑ دی گئی اور سیدھی شاہ شمس کے مزار پر روکی گئی۔جون بڑے تحیر کے عالم میں مزار کے اندر گئے، پھر مزار کے
10/15
احاطے میں دو قبروں کے درمیان لیٹ گئے۔ یا اللہ! یہ کیا ماجرا ہے۔ یں ہم جون کو بلا کر غلطی تو نہیں کر بیٹھے۔ شدید گرمی اور لو نے برا حال کیا ہوا تھا۔ کافی دیر کے مراقبے کے بعد پسینے میں شرابور، آبدیدہ آنکھیں لئے اٹھے اور کہنے لگے شاہ شمس نے حکم دیا ہے کہ
11/15
ان کے کتبے کی اردو ٹھیک کی جائے کاغذ قلم منگوا کر تحریر لکھی اور مہتمم کے حوالے کر دیا۔
واپسی خانیوال تک خاموشی چھائی رہی۔ خانیوال کا سائن بورڈ پڑھتے ہی کہنے لگے طاہر!خانیوال کا نام کس نے رکھا۔طاہر نے بتایا یہاں کےبڑے زمیندار جو ڈاہےخان کہلاتے ہیں، ان کے نام سے شہر خانیوال
12/15
مشہور ہوا۔ آہستگی سے کہا ”خانیوال کے خ کا نقطہ اوپر سے نیچے لے آؤ“ یوں اپنے طور پر خانیوال کا نام جانی وال رکھ دیا۔ مزید کہا ”تم قصباتی لوگ شہروں کے نام بھی ایسے رکھتے ہو کہ ناموں سے ہی یقین ہو جاتا ہے، تم لوگ تکبر پسند ہو“ ۔ پھر ایک سوال داغ دیا ”تم بتاؤ اللہ نے دنیا کس
13/15
بنیاد پر بنائی؟اس طرح کے سوال ہماری سمجھ سے بالاتر تھے، کوئی جواب نہ دے سکا۔خود ہی جواب دیتے ہوئے کہا ”محبت کے اظہار کے لیے“۔
جون بھائی گھر اترے تو چائےکا وقت ہو چکا تھا۔بڑے اہتمام کے ساتھ چائے کی ٹرالی ان کے سامنےسجائی گئی۔ جون خاموش تھے۔ جب تیسری بار عرض کیا ”چائے بناؤں“
14/15
تو غصے میں بولے ”یہ دوزخ کا پانی تم پیو، مجھے تو ’آب کوثر‘ پلاؤ“ ۔ اب ان کے اس ’آب کوثر‘ کی تلاش میں گھوڑے دوڑائے گئے جو صحرا کا سینہ چیرتے ہوئے نکلے، ایک گھنٹے میں واپس آئے۔ جون ایک دن ہمارے مہمان تھے اپنا ’آب کوثر‘ ہی پیتے رہے۔
15/15

• • •

Missing some Tweet in this thread? You can try to force a refresh
 

Keep Current with Ibn-e-Hasan🎷📚✒☕🚬

Ibn-e-Hasan🎷📚✒☕🚬 Profile picture

Stay in touch and get notified when new unrolls are available from this author!

Read all threads

This Thread may be Removed Anytime!

PDF

Twitter may remove this content at anytime! Save it as PDF for later use!

Try unrolling a thread yourself!

how to unroll video
  1. Follow @ThreadReaderApp to mention us!

  2. From a Twitter thread mention us with a keyword "unroll"
@threadreaderapp unroll

Practice here first or read more on our help page!

More from @saeedma08417161

7 Mar
Jesus, Christianity & New Testament part4:

حضرت عیسی نے Baptism کی رسم کے بعد چالیس دن اور رات جنگلوں اور بیانانوں میں گزارے اور اسکے بعد تبلیغ کا باقاعدہ آغاز کیا۔ گاسپلز کے مطابق انکی تبلیغ کا محور یہودی اور تبلیغ کے اہم نکات میں زمین پر خدا کی بادشاہت کے نظام کی پیشنگوئی،

1
انسانوں کی برابری کا درس، محبت بھائی چارہ، منصفانہ عدل کا نظام، گناہوں سے بچنے کی تلقین، گناہ اور ثواب کے نتیجے میں یوم حساب ہوتے تھے۔
گاسپلز یہ بھی بتاتی ہیں کہ حضرت عیسی کے ساتھ انکے بارہ نہایت وفادار اور فرمانبردار ساتھی ہوتے تھے، اسکے علاوہ عیسی کے پاس معجزےدکھانے کی قدرت

2
بھی موجود تھی جس میں کوڑھ کا علاج، مردوں کو زندہ، اندھوں کو بصارت بخشنا، لولے لنگڑوں کا علاج، پانی پر چلنا، پانی کو شراب میں تبدیل کردینا شامل ہیں۔

حضرت عیسی کی تبلیغ غریبوں اور معاشرے کمزور گروہوں کے لئے مقناطیسی اہمیت کی حامل ثابت ہوئی کیونکہ ان کا کہنا تھا کہ اونٹ کا سوئی

3
Read 29 tweets
28 Feb
Jesus, Christianity & New Testament part3:
مسیحی مذہبی فلسفے کے کچھ بنیادی اصول ہیں جن کے بارے میں کہا جاسکتا ہے کہ ان پر مسیحت قائم ہے۔

1۔تثلیث Trinitپر (The Father, The Son & The Holy Spirit) یقین رکھنا

2۔حضرت عیسی کی پیدائش کسی جنسی ملاپ کے بجائے خدا کا معجزہ ہے جو خدا
1/24
کی منشا کے مطابق کنواری حضرت مریم کو ماں بنادیا۔

3۔حضرت عیسی کو مصلوب کیا گیا اور سولی پر چڑھایا گیا جس سے ان کی موت واقع ہوگئی۔

4.عیسی کو موت کے تین دن بعد دوبارہ زندہ کیا گیا اور وہ جنت کی طرف اٹھا لیے گئے، عیسی نے دوبارہ واپس آنا ہے، تمام مردوں کو زندہ کیا جائے گا،
2/24
یوم حساب ہوگا اور خدا کی بادشاہت کا ابدی زمانے کے آغاز ہوگا۔

5.اصل گناہ(The Original Sin)حضرت آدم نے حوا کے کہنے پر ممنوع پھل کھاکرخدا کی نافرمانی کی۔
6.ہر انسان جب پیدا ہوتا ہے تو وہ اصل گناہOriginal Sinکی پیداوار ہے، لہذا مرنے کے بعد کسی انسان کی جہنم سے نجات ممکن نہیں
3/24
Read 26 tweets
14 Feb
Jesus, Christianity & New Testament part2:

آج کی اس تھریڈ میں بات تو حضرت عیسیٰ کی پیدائش، زندگی اور ان سے متعلق اہم واقعات پر بات کرنی تھی لیکن آگے بڑھنے سے پہلے قبل از مسیح BC اور AD بعد از مسیح کی مختصر سی وضاحت کرلیں۔
1/8
جب ہم تاریخ پڑھتے ہیں یا قدیم زمانوں کے بارے میں گفتگو کرتے ہیں تو AD/BC/BCE/CE کا استعمال کرکے مختلف زمانوں یا ادوار کا تعین کرتے ہیں۔
دنیا بھر بہت سے لوگ غلط طور پر AD کے مخفف کو آفٹر ڈیتھ (After Death) سمجھ لیتے ہیں۔
2/8
پانچویں صدی عیسوی میں Dionysius Exiguous نامی شخص جو ایک عیسائی راہب تھا اس نے Anno Domini نامی تاریخوں کا سسٹم ایجاد کیا، لہذا AD دراصل Anno Domini کا مخفف ہے۔ لاطینی زبان میں Anno Domini nostri Jesu Christi کا مطلب In the year of lord Jesus Christ ہے۔
3/8
Read 8 tweets
6 Feb
Jesus, Christianity & New Testament Part1.
دیگر مزاہب کی طرح مسیحیت کی موجودہ شکل بھی کئی صدیوں میں تشکیل پائی۔
مسیحیت اسوقت دنیا کا سب سے بڑا مذہب ہے، اس مذہب کو ماننےوالوں جن میں رومن کیتھولک، ایسٹرن آرتھوڈکس، اورینٹل آرتھوڈکس، اینجیلکن ازم اور پروٹسٹنٹ شامل ہیں، کی تعداد
1/10
تقریباً دو ارب پچاس کروڑ کے لگ بھگ ہے، یعنی کرہ ارض پر بسنے والے ہر تین افراد میں ایک فرد مسیحی عقیدے سے تعلق رکھتا ہے۔

مسیحی عقیدے کی اس سلسلہ وار تھریڈ کو مختصراً بیان کرنے کے لئے بھی چار مختلف حصّوں میں تقسیم کرنا پڑے گا۔
2/10
اول۔ انجیل کی کمپوزیشن (New Testament)۔
دوم۔ حضرت عیسیٰ کی زندگی اور ان سے متعلق واقعات۔
سوم۔ مسیحیت کا پھیلاؤ اور پرچار۔
چہارم۔ مسیحیت اور حضرت عیسیٰ پر انڈیپنڈنٹ اسکالرز کی ریسرچ۔

سب سے پہلے انجیل کی کمپوزیشن پر بات کرلیتے ہیں.
3/10
Read 10 tweets
4 Jan
Pakistan is a country of Risk:

Pakistan risk assessments show that country's risk rating is “D” which is a very high risk for Foreign Direct Investment inflows (Global Edge 2020). Pakistan is a country of Risk in the economy for international business because of weak and
1/24
venerable democracy & significant civil-military imbalance. Pakistan has a high-risk political and economic situation which is continuously creating a tough business environment that leads to a significant impact on corporate payment behavior and increases the probabilities
2/24
of corporate default. Political risk has an adverse effect on any economy (Khan, M. & Akber, M., 2013).

Pakistan’s military establishment is not only so powerful but as inept as it corrupt. They ruled Pakistan for thirty-four years under the direct Military Dictatorships,
3/24
Read 24 tweets
1 Jan
Judaism & Old Testament Part 10.
King David, King Soloman & Split of United Jewish Kingdom.
حضرت داؤد، شاہ طالوت (King Saul) کی موت کے بعد بنی اسرائیل کے دوسرے بادشاہ بنے۔ اس زمانے میں بنی اسرائیل کے نبی سموئیل ہوا کرتے تھے۔ طالوت کی بادشاہت کے دوران ہی سموئیل، طالوت سے
1/24
خوش نہ تھے، جسکی بہت سی وجوہات میں سب سے اہم وجہ یہ ہے کہ طالوت نے سموئیل کے ایک انتہائی اہم حکم کی نافرمانی کی۔ قصہ کچھ یوں ہے کہ سموئیل نے طالوت کو امالیک (Amalek) قوم پر حملہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا تھا کہ فتح حاصل کرنے کے بعد امالیک قوم کا کوئی شخص
2/24
عورتیں، مرد، جوان یا بوڑھے کسی کو زندہ نہ چھوڑا جائے نیز یہ کہ انسانوں کے علاوہ بھی ہر جاندار شے بشمول نباتات و حیوانات کو بھی مار یا جلادیا جائے۔ طالوت نے تمام احکامات کی تعمیل کی سوائے دو احکامات کے ایک تو اسنے امالیک کے بادشاہ اگاگ (Agag) کو زندہ گرفتار کرلیا قتل نہیں کیا
3/24
Read 25 tweets

Did Thread Reader help you today?

Support us! We are indie developers!


This site is made by just two indie developers on a laptop doing marketing, support and development! Read more about the story.

Become a Premium Member ($3/month or $30/year) and get exclusive features!

Become Premium

Too expensive? Make a small donation by buying us coffee ($5) or help with server cost ($10)

Donate via Paypal Become our Patreon

Thank you for your support!

Follow Us on Twitter!

:(